قبائلی اضلاع

شمالی وزیرستان : اصلاحات سے متعلق جرگہ، پی اے و ملکان کی شرکت

شمالی وزیرستان کے پولیٹیکل ایجنٹ کامران خان آفریدی نے فاٹا اصلاحات سے متعلق قبائلی مشران پر مشتمل جرگہ بلایا۔ بدھ کو میرانشاہ کے ٹوچی سکاوٹس قلعے میں ہونے والے اس جرگے میں ایک سو پچاس سے زائد قبائلی عمائدین و ملکان نے شرکت کی جس کی رہنمائی چیف آف وزیرستان ملک خان زیب نے کی۔ ان قبائلی عمائدین کو پولیٹیکل ایجنٹ کی جانب سے بریفنگ دی گئی ہے کہ وزیر اعظم نوازشریف کی جانب سے بنائی گئی فاٹا اصلاحاتی کمیٹی بہت جلد شمالی وزیرستان کا دورہ کرے گی اور یہاں کے عمائدین سے مشاورت کرے گی۔

پولیٹیکل ایجنٹ نے واضح کیا ہے کہ کمیٹی کو بلانے سے پہلے ملکان کے ساتھ مشاورت کی جائے کہ آیا فاٹا کو خیبر پختونخوا میں ضم کرانا چاہتے ہیں، ایف سی آر میں ترامیم کے حق میں ہے یا فاٹا کونسل بنانا چاہتے ہیں۔

جرگے میں شریک عمائدین نے ٹی این این کو بتایا ہے کہ اس جرگے کے دوران فوجی اپریشن میں میرانشاہ اور میر علی کے بازاروں میں مسمار ہونے والے دوکانوں کے بارے میں بھی پولیٹیکل انتظامیہ سے بات چیت ہوئی ہے جس پر پولیٹیکل انتظامیہ نے واضح کیا کہ اس بارے قبائلی عمائدین کی تین کمیٹیاں تشکیل دی جائینگی جو کہ بازاروں کی دوبارہ آبادکاری اور پہاڑوں میں موجود معدنی ذخائر کی ملکیت کے بارے میں ہونے والے فیصلوں میں حکومت کے ساتھ تعاون کرے گی۔

Show More

متعلقہ پوسٹس

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button