قبائلی اضلاع

پشاور کے بعد اب کرم ایجنسی میں بھی دیوار مہربانی نادار لوگوں کا سہارا بننے لگا

پشاور کے بعد کرم ایجنسی کے پاڑہ چنار میں بھی دیوار مہربانی غریب اور نادار لوگوں کی حاجت سر کرنے کا محور ٹہرا۔ کرم ایجنسی کے علاقہ پاڑہ چنار میں بھی ایک دیوار کو دیوار کو پشاورکے حیات میں واقع دیوار مہربانی سے موسوم کیا گیا ہے جہاں علاقے کے صاحب استطاعت حضرات فالتو ضروریات زندگی کی اشیا اس دیوار پر لٹکا کر چلے جاتے ہیں اور علاقے کئ غریب اور نادار لوگ اپنی ضرورت کے مطابق اشیا یہاں سے اٹھا لیتے ہیں۔

12717903_10208807438043289_2869599492210253250_n

اس دیوار پر کپڑے، جوتے اور دیگر ضروریات زندگی کا سامان اویزاں کیا جاتا ہے۔ یہ دیوار کرم ایجنسی کی ایک سماجی تنظیم نے پاڑہ چنار پریس کلب کے قریب مختص کی ہے۔ ایدھی کے نام سے کام کرنے والی سماجی تنظیم کے کارکن یوسف لالا کا کہنا ہے کہ بہت سے لوگ نادار اور غریب ہونے کے باوجود کسی کے آگے ہاتھ پھیلانے میں عار محسوس کرتے ہیں جن کے لئے دیوار مہربانی ایسی جگہ ہے جہاں مانگے بغیر ان کی ضروریات زندگی کا سامان اویزاں ہوتا ہے۔

10400132_10208807437963287_7527234002664716417_n (1)

اس دیوار سے ضروریات زندگی کا سامان حاصل کرنے والے افراد نے ٹی این این کو بتایا کہ یہ دیوار ان کے لئے واقعی میں ایک مہربانی ہے کیونکہ یہاں کئی اشیا ایسے ہوتی ہیں جو کہ ہم غریب لوگ خرید نہیں سکتے اور اس دیوار سے ہمیں مفت میٰں مل جاتے ہیں۔

Show More

متعلقہ پوسٹس

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button