قومی

باچاخان یونیورسٹی واقعے کےلئے تحقیقاتی کمیٹی تشکیل دیدی گئی

کاﺅنٹرٹیررازم ڈیپارٹمنٹ خیبرپختونخوا نے سانحہ باچاخان یونیورسٹی کےلئے6 رکنی تحقیقاتی ٹیم بنا د ی ہے، ٹیم نے ایس پی سی ٹی ڈی مردان ریجن کی سربراہی میں کا م شروع کردیا ہے جبکہ چارسدہ پولیس نے واقعے میں ملوث ملزمان اورسہولت کاروں کی گرفتاری میں مددکرنےوالوں کےلئے 10 لاکھ روپے انعام کااعلان کیاہے ۔
ذرائع کے مطابق سی ٹی ڈی کی 6 رکنی تحقیقاتی ٹیم کو ڈی پی او چارسدہ سہیل خالد اور دیگرافسران کی معاونت بھی حاصل ہوگی ، تحقیقاتی ٹیم نے جائے وقوعہ کا معائنہ بھی کیا ہے اور وہاں سے شواہداکٹھے کرکے عینی شاہدین کے بیانات بھی قلمبندکرلئے ہیں ، تحقیقاتی ٹیم واقعے کی تمام محرکات کی سائنسی بنیادوں پر تحقیقات کررہی ہے، ٹیم نے یونیورسٹی کے ملازمین کوبھی تفتیش میں شامل کیا ہے، ادھر ڈی پی اوچارسدہ نے سانحہ باچاخان یونیورسٹی میں ملوث ملزمان اور سہولت کاروں کی گرفتاری میں مددکرنےوالوں کےلئے 10 لاکھ روپے انعام کااعلان کیاہے جس کیلئے ایک خصوصی نمبر بھی جاری کیا گیا ہے ، ڈی پی او کے مطابق معلومات دینے والے کا نام صیغہ راز میں رکھا جائیگا۔

Show More

متعلقہ پوسٹس

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button