قبائلی علاقہ جات میں چھٹی قومی خانہ و مردم شماری کا عمل معمول کے مطابق شروع ہو گا

چیف کمشنر شماریات آصف باجوہ نے کہا ہے کہ قبائلی علاقہ جات میں چھٹی قومی خانہ و مردم شماری کا عمل معمول کے مطابق شروع ہو گا ،قبائلی علاقوں میں فاٹا ڈویلپمنٹ اتھارٹی کے ذریعے ڈیٹا جمع کرنے کا کام کیا جائے گا ،دوسرے مرحلے میں 86 اضلاح میں خانہ و مردم شماری کا دوسرا مرحلہ 25 اپریل کو شروع ہو گا ،رواں مالی سال کے پہلے 9 ماہ (جولائی تا مارچ 2016-17) کے دوران افراط زر کی اوسط شرح 4.01 فیصد ریکارڈ کی گئی ¾پیر کو میڈیا بریفنگ کے دوران انہوں نے کہا کہ اورکزئی ایجنسی میں خانہ و مردم شماری کا عمل بلاتعطل جاری ہے اور اس وقت پہلے مرحلہ کے دوسرے بلاک کا کام ہو رہا ہے، دیگر ایجنسیوں میں دوسرے مرحلہ میں 25 اپریل سے خانہ و مردم شماری کا آغاز ہو گا۔ آصف باجوہ نے کہا کہ 63 اضلاع میں پہلے مرحلے کے تحت بلاک ٹو میں بھی خانہ شماری کا کام مکمل ہو چکا ہے، مردم شماری کا آغاز پیر سے ہوا ہے جو 13 اپریل تک مکمل ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان بیورو برائے شماریات نے خانہ و مردم شماری کے حوالے سے شکایات کے اندراج کے لئے تحصیل کی سطح پر کنٹرول رومز قائم کئے گئے ہیں اور اب تک دو ہزار سے زائد شکایات موصول ہو چکی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پہلے مرحلے میں شامل علاقوں میں اگر کسی گھر یا خاندان کا اندراج رہ گیا ہو تو اس کے لئے شکایت کا اندراج کرایا جا سکتا ہے۔ آصف باجوہ نے کہا کہ دوسرے مرحلے میں 86 اضلاح میں خانہ و مردم شماری کا دوسرا مرحلہ 25 اپریل کو شروع ہو گا۔ پاکستان بیورو برائے شماریات کے چیف شماریات آصف باجوہ نے ماہانہ افراط زر بارے میں اعدادوشمار پیش کرتے ہوئے بتایا کہ مارچ 2017ءمیں فروری 2017ءکے مقابلہ میں 0.84 فیصد اور مارچ 2016ءکے مقابلہ میں 4.94 فیصد اضافہ ہوا ہے۔

Show More

جواب دیں

Back to top button
Close