قومی

پی آئی اے احتجاج: تین اہلکاروں کی شہادت کے پندرہ دن بعد ہڑتال ختم

پاکستان کی قومی ائیرلائن پی آئی اے کی ملازمین کا ادارے کے مجوذہ نجکاری کے خلاف ہونے والے سولہ دن کی ہڑتال ختم کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

منگل کو کراچی میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے پی آئی اے ملازمین کی احتجاجی کمیٹی کے رہنما سہیل بلوچ نے اس احتجاج کے خاتمے کا اعلان کرتے ہوئے ملازمین سے اپیل کی ہے کہ کل سے اپنے فرائض منصبی سنبھالنے کے لئے کمربستہ ہوجائیں۔ سہیل بلوچ کے مطابق آٹھ دن سے پی ائی اے کی فلائٹ آپریشن بند ہے جس نہ صرف مسافروں کو مشکلات کا سامنا ہے بلکہ قومی ائیر لائن کو نقصان بھی پہنچ رہا ہے۔ انہوں کو ملازمین کو یقین دہانی کرائی ہے کہ حکومت سے ان کے مذاکرات چل رہے ہیں جسکے مثبت نتائج برآمد ہونگے۔

دو فروری سے فلائٹ اپریشن بند ہونے کی وجہ سے قومی ائیر لائن کو دو ارب روپے سے زائد کا نقصان ہوا ہے جطکہ حکومتی اعداد و شمار کے مطابق پچھلے چند سالوں میں پی آئی اے کا خسارہ تین سو بیس ارب روپے تک پہنچ گیا ہے اور یہی وجہ ہے کہ اس کی نجکاری کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ ملازمین کی ہڑتال ختم ہونے پر گزشتہ رات فلائٹ آپریشن سروس دوبارہ بحال ہوئی ہے لیکن شیڈول متاثر ہونے کی وجہ سے اب بھی کئی فلائٹس تاخیر کا شکار ہیں اور یا پھر کینسل ہیں۔

Show More

متعلقہ پوسٹس

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button