خیبر پختونخوا

ڈی سی بٹگرام کے تبادلے کے خلاف تاجرتنظیموں کا احتجاجی مظاہرہ

بٹگرام کے علاقے تھاکوٹ میں تاجران نے حکومت کو دھمکی دی ہے کہ اگر ڈپٹی کمشنر بٹگرام کا تبادلہ منسوخ نہ کیا گیا تو پچیس جنوری کو مین شاہراہ ہر قسم کے ٹریفک کے لئے بند کردی جائیگی۔  منگل کو شاہراہ ریشم پر ڈی سی بٹگرام کے تبادلے خلاف ہونے والے مظاہرے میں تاجروں نے اس شاہراہ کو چار گھنٹوں تک ہر قسم کے ٹریفک کے لئے بند رکھا۔ اس مظاہرے کے دوران تاجران کا کہنا تھا کہ سیاسی اثر رسوخ کے تحت ڈپٹی کمشنر بٹگرام ظریف المانی کا تبادلہ کیا گیا ہے جو کہ ان کو منظور نہیں کیونکہ انکے مطابق ڈی سی بٹگرام نے علاقے میں ترقیاتی کاموں کا اجرا کیا ہے اور اس علاقے کی ترقی اور خوشحالی ان کی اولین ترجیح رہی ہے۔

تاجروں کا کہنا تھا کہہم ہر حد تک جاسکتے ہیں اور جو ہم سے ہوسکتا ہے وہ ہم ضرور کرینگے اور عوام سے بھی کہتے ہیں کہ یہاں آنا ہے تو اچھی ڈیوٹی انجام دینی ہوگی کیونکہ اب بٹگرام کے نوجوان بیدار ہوگئے ہیں اور یہ اپنا حق لینے کے لئے کسی بھی حد تک جاسکتے ہیں

Show More

متعلقہ پوسٹس

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button