خیبر پختونخوا

باب پشاور، اپنی نوعیت کا پہلا منصوبہ 5 ماہ کی ریکارڈ مدت میں مکمل

پشاور کے حیات آباد فیز تھری چوک میں ایک ارب70کروڑ کی لاگت سے بننے والے باب پشاور فلائی اوور کا افتتاح پیر کو کیا گیا۔ اس فلائی اوور کا افتتاح وزیر اعلٰی پرویزخٹک اور وزیر بلدیات عنایت اللہ نے کیا جبکہ اس موقع پر پاکستان تحریک انصاف کے چئیرمین عمران خان، سپیکر صوبائی اسمبلی اسد قیصر، جماعت اسلامی کے مرکزی امیر سراج الحق اور دیگر صوبائی وزرا بھی موجود تھے۔ اس موقع پر وزیر اعلٰی پرویزخٹک کا کہنا تھا کہ اپنی نوعیت کا  یہ پہلا ٹو لیول فلائی اوور ہے جو کہ ریکارڈ 5 ماہ کی مدت میں تعمیر کیا گیا ہے۔وزیر اعلٰی کا کہنا تھا کہ پشاور ضلع میں نئے سڑکوں کی تعمیر وتوسیع کے لئے بیس ارب روپے کا بجٹ مختص کیا گیا ہے جسسے ٹریفک کے رش پر کافی حد تک قابو پالیا جائے گا۔

افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر بلدیات عنایت اللہ کا کہنا تھا کہ اس پل سے روزانہ پانچ لاکھ افراد کا گزر ہوتا ہے جبکہ ضلع کے عوام کو بہت جلد ایسے تین میگا پروجیکٹس کی خوشخبری سنائی جائیگی۔ عمران خان نے تقریب سے خطاب کے دوران حکومت کے اس کامیاب پروجیکٹ پر عوام کو مبارکباد دی ہے اور کہا ہے کہ قوم کے پیسے قوم پر ہی خرچنے چاہئے۔ فلائی اوور سے مستفید ہونے والے عوام نے حکومت کے اس اقدام کو سراہا ہےاس کا بہت فائدہ ہے اور اس سے رش کم ہوگا۔ یہ ایک بڑا کارنامہ ہے کیونکہ یہ منصوبہ حکومت نے بہت قلیل عرصے  میں مکمل کیا ہے لیکن صرف پل بنانا ہی کافی نہیں بلکہ ٹریفک رش کو ختم کرنے کا بھی کوئی حل نکالا جائے۔ حاجی کیمپ اور کارخانوں میں بھی ایسے فلائی اوورز کی تعمیر کرنی چاہئے۔

Show More

متعلقہ پوسٹس

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button