خیبر پختونخوا

پشاور کے ہسپتالوں میں لوکل پرچیز کے تحت مفت علاج کی سہولت بند

پشاور(ٹی این این) نئے اصلاحاتی قوانین کے نفاذ کے بعدپشاور کے ہسپتالوں میں لوکل پرچیز کے تحت لوگوں کو مفت علاج کی سہولت بند کر دی گئی ہے جس کہ وجہ سے دوردراز علاقوں سے مفت علاج کی غرض سے پشاور آنیوالے مستحق اور بے بس مریض علاج کئے بغیر ہی گھروں کو لوٹ رہے ہیں

ذرائع کے مطابق پشاور کے تینوں بڑے سرکاری ہسپتالوں ایل آر ایچ،کے ٹی ایچ اور ایچ ایم سی کے علاوہ صوبہ بھر کے سرکاری ہسپتالوں میں ایمر جنسی ادویات اور علاج کے ساتھ ساتھ وارڈز میں داخل مریضوں کے علاج کی مد میں ایل پی(لوکل پرچیز) کے نام سے فنڈ ز مختص ہوتے ہیں جس سے داخل مریضوں کے ادویات کے اخراجات اٹھائے جاتے ہیں تاہم نئے قوانین کے نفاذ کے بعد پشاور کے ہسپتالوں میں یہ سہولت بند کردی گئی ہے جس کی وجہ سے لوگوں کو قرض لیکر مہنگی ادویات خریدنی پڑ رہی ہے اور روزانہ کی بنیاد پر بیسیوں افراد استطاعت نہ رکھنے کی وجہ سے مایوس لوٹ رہے ہیں

اس حوالے سے محکمہ صحت کے ذرائع نے بتایا کہ ہسپتالوں میں لوکل پرچیز کے فنڈز میں بے ضابطگیوں کو کنٹرول کرنے کیلئے طریقہ کار کو سخت بنایا ہے مفت علاج کی سہولت مریضوں کو پہلے کی طرح حاصل ہے البتہ لیڈی ریڈنگ ہسپتال میں انٹی کرپشن اہلکاروں کی انکوائری کی وجہ سے معاملات متاثر ہوئے ہیں۔

Show More

متعلقہ پوسٹس

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button