خیبر پختونخوا

غیر معیاری تعمیر کی صورت میں ٹھیکیداراز سر نو تعمیر کا پابند ہو گا‘ وزیراعلیٰ پرویزخٹک

وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا پرویزخٹک نے کہا ہے کہ سڑکوں اورسرکاری عمارتوںکی غیر معیاری تعمیر کی صورت میں متعلقہ ٹھیکیدار اس منصوبے کی مقررہ معیار کے مطابق از سر نو تعمیر کا پابند ہو گا جبکہ اس کے خلاف تحقیقات بھی ہو گی ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے سول سیکرٹریٹ میں سالانہ ترقیاتی فنڈز کے ششماہی جائزہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا ۔ اجلاس میں 19 محکموں کی طر ف سے سالانہ ترقیاتی پروگرام پر عملدرآمد اور کام کی رفتار کا جائزہ لیا گیا۔ اجلاس میں مختلف منصوبوں کی راہ میں حائل رکاوٹوں کا جائزہ لینے کے ساتھ منصوبوں پر کام تیز کرنے کیلئے ہدایات دی گئیں ۔ وزیراعلیٰ نے ایسے منصوبوں جن کیلئے جگہ کی نشاندہی میں مسائل آرہے ہوں کی فہرست کابینہ کے سامنے پیش کرنے کا حکم دیا تاکہ ایسے منصوبوںکو سالانہ ترقیاتی پروگرام سے نکالا جا سکے ۔ اسی طرح انہوں نے از سر نو تعمیر ہونے والی سرکاری عمارت کے انہدم کو پی سی ون کا حصہ بنانے کی ہدایت کی ۔
انہوں نے غیر معیاری تعمیر کی صورت میں جزوی تلافی کی جگہ منصوبے کی از سر نو تعمیر کو بطور جرمانہ لازمی قرار دیا۔ انہوں نے آئندہ سرکاری اداروں کیلئے عمارات کی تعمیر ، حیات آباد کی بجائے ریگی للمہ ٹاﺅن شپ میں کرنے کی ہدایت کی ۔ انہوں نے پی ٹی سی فنڈز کی تفصیلات متعلقہ ویلج کونسل کے ناظم اور ڈسٹرکٹ کونسل کے ممبر کو فراہم کرنے کی ہدایت کی ۔ اجلاس کو بتایا گیا کہ سرکاری سکولوںمیںسائنس کی 500 لیبارٹریاں اس مالی سال کے اختتام تک کام شروع کردیں گی اجلاس کو بتایا گیا کہ محکمہ اطلاعات کے تحت تین ایف ایم ریڈیو سٹیشنز کے قیام کیلئے فنڈز جلد ہی جاری کئے جائیں گے۔

Show More

متعلقہ پوسٹس

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button