خیبر پختونخوا

پختونخوا میل نرسز کا پشاور پریس کلب کے سامنے احتجاجی مظاہرہ

 

پشاور میں میل نرسز نے خالی آسامیوں پر فی میل نرسز نہ ہونے کے باؤجود میل نرسز بھرتی نہ کرنے پر پریس کلب کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کیا ہے۔

گزشتہ روز ینگ نرسز ایسو ای ایشن کے ممبران کا پریس کلب کے سامنے احتجاجی مظاہرے کے دوران کہنا تھا کہ نئی بھرتیوں کے بعد دو سو آسامیاں اس وجہ سے خالی پڑی ہیں کہ فی میل نرسز نہیں ہے جبکہ صوبہ بھر میں ساڑھے چار ہزار سے زائد تجربہ کار میل نرسز بے روزگار بیٹے ہیں۔ انہوں نے نئے بھرتی ہونے والی میل نرسز کی بھرتیوں میں بے قاعدگیوں کا الزام لگایا اور کہا ہے کہ میرٹ کو مدنظر رکھ کر بھرتیاں نہیں کی گئی ہیں۔

“نرسز کے لئے ضروری ہے کہ پاکستان نرسنگ کونسل سے سندیافتہ ہو جبکہ موجودہ بھرتی کئے گئے نرسز میں کسی کے پاس بھی یہ سند موجود نہیں اور ان کے مطابق کچھ نے ٹیسٹ بھی فیل کیا ہے۔ میل نرسز کے لئے آسامیاں ویسے ہی کم آرہی ہوتی ہیں اوپر میرٹ کے بغیر بھرتیوں میں ناک میں دم کر کررکھا ہے۔ اس شعبے میں صنفی تضاد بہت ہے خواتین کو زیادہ موقع دیا جاتا ہے اور اگر خواتین نہ ہو تو ان کی آسامیاں خالی پڑی رہتی ہیں لیکن میل نرسز کو موقع نہیں دیا جاتا حالانکہ ایسے میل نرسز ہیں جو بارہ تیرہ سال سے بے روزگار بیٹے ہیں”۔

Show More

متعلقہ پوسٹس

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button