خیبر پختونخوا

خیبر پختونخوا: ڈاکٹرز نے گرانفروش ادویات ساز کمپنیوں کا بائیکاٹ کردیا

خیبرپختونخوا میں ڈاکٹرز کی صوبائی تنظیم پی ڈی اے نے ان تمام ادویات ساز کمپنیوں کی ادویات استعمال کرنے کا بائیکاٹ کیا ہے جنہوں نے ادویات کی قیمتوں میں اضافہ کیا ہے۔ ڈاکٹرز نے ان قومی و بین الاقوامی ادویات ساز کمپنیوں کو تین دن کی مہلت دی ہے کہ اپنی قیمتوں میں کمی لائے ورنہ ڈاکٹرز ان کی ادویات کی جگہ مریضوں کو متبادل میڈیسن تجوی کرینگے۔ اس بارے پراوینشل ڈاکٹرز ایسوسی ایشن کے صدر امیرتاج نے ٹی این این کو بتایا کہ جب تک یہ ادویات ساز کمپنیاں اپنی قیمتوں میں کمی نہ لائے ڈاکٹرز کی جانب سے یہ بائیکاٹ جاری رہے گی۔ ان کے مطابق ڈاکٹرز کی یہ ہڑتال عوام کی فلاح و بہبود کے لئے ہے تاکہ مریضوں کو سستی اور معیاری ادویات کی فراہمی ممکن ہو۔

خیال رہے کہ بعض کمپنیوں نے پچھلے کچھ عرصے سے بلڈ پریش، ابتدائی طبی امداد اور کئی دیگر اینٹی بائئوٹک ادویات کی قیمتوں میں بیس سے پچاس فیصد تک کا اضافہ کیا ہے۔ دو دن قبل وفاقی حکومت نے اس بارے ان کمپنیوں سے قیمتوں کی کمی سے متعلق ایک اجلاس کا اہتمام کیا تھا لیکن اس اجلاس میں صرف ایک کمپنی کا نمائندہ حاضر ہوا جس کی وجہ سے یہ مذاکرات ناکام ہوئیں۔

Show More

متعلقہ پوسٹس

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button