خیبر پختونخوا

اکیس فروری عالمی یوم مادری زبان

اکیس فروری کو پوری دنیا کی طرح خیبرپختونخوا میں بھی مادری زبانوں کے عالمی دن کے طور پر منایا گیا۔ اس موقع پر صوبہ بھر میں مختلف سیاسی جماعتوں، غیرسرکاری تنظیموں کی جانب سےتقاریب اور واک کا اہتمام کیا گیا۔ عوامی نیشنل پارٹی کی جانب سے اج باچا خان مرکز میں ایک تقریب کا اہتمام کیا گیا جس میں سیاسی رہنماؤں، مفکرین اور دیگر سماجی حلقوں سے تعلق رکھنے والے افراد نے شرکت کی۔ اس موقع پر تقریب سے خطاب کرتے ہوئے رہنماؤں کا کہنا تھا کہ بچوں کو تعلیم مادری زبان میں ملنی چاہئے کیونکہ اس سے طلبا اسانی سے سیکھ سکتے ہیں۔

دوسری جانب پشاور پریس کلب کے سامنے بھی ایک واک کا انعقاد کیا جس میں پارٹی رہنماؤں کے علاوہ یونیورسٹی طلبا نے بھی شرکت کی۔ اس واک کے دوران مطالبہ کیا گیا کہ بچوں کو مادری زبان میں تعلیم دی جائے۔ ٹی این این سے بات کرتے ہوئے گل مرجان نامی طالبعلم کا کہنا تھا کہ “ ہم یہ دن اسی لئے منارہے ہیں کہ پختون اپنی زبان سے بہت محبت کرتے ہیں کیونکہ اس میں ہماری تاریخ ہے اس سے ہماری ثقافت ہے۔ ہمیں ہماری مادری زبان میں تعلیم دی جائے کیونکہ ہم باقی دنیا کے ساتھ تعلیمی مقابلے میں شانہ بشانہ چلنا چاہتے ہیں۔ ہم مہذب دنیا میں اپنی مادری زبان کے زریعے شامل ہونا چاہتے ہیں۔

Show More

متعلقہ پوسٹس

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button