خیبر پختونخوا

ہنڈی کاروبار بند، صرافہ ایسوسی ایشن کا احتجاج

پشاور کے چوک یادگار میں کرنسی کے غیر قانونی ایکسچینج پر پابندی کے خلاف پشاور کے سنار تنظیم صرافہ ایسوسی ایشن نے احتجاجی مظاہرہ کیا ہے۔

ہفتے کو چوک یادگار میں ان مظاہرین نے ٹائر جلاکر روڈ بند رکھا اور حکومت سے مطالبہ کیا کہ اس کاروبار کو بند کرنے کی بجائے ان کے لئے لائسنس کی شرائط میں نرمی کی جائے۔ مظاہرین کے مطابق پچھلے گیارہ دنوں سے ان کی مارکیٹ کے  پانچ سو دکانیں بند پڑی ہیں اور روز اول سے ان کا احتجاج جاری ہے لیکن تاحال کوئی حکومتی نمائندہ ان سے مذاکرات کے لئے نہیں آیا ” حکومت ہمارے ساتھ مذاکرات تک کرنے کے لئے تیار نہیں ہم سے دور بھاگتی ہےاور اگر ہمارے مطالبے دو دن میں پورے نہ کئے گئے تو ہم اس احتجاج میں پورے پشاور کو بند کردینگے”۔

خیال رہے کہ وفاقی تحقیقاتی ادارے ایف آئی اے نے ہندی یا حوالے کے اس روزگار پر اس الزام کے تحت پابندی لگائی ہے کہ اس  کاروبار کے زریعے عسکریت پسندوں کو مالی اعانت بھیجی اور وصول کی جاتی ہےجبکہ تاجران نے موقف اپنایا ہے کہ مشکوک دوکانداروں کے وہ خود حکومت کے تحویل میں دینے کو تیار ہے لیکن پوری مارکیٹ کو بند کروانا زیادتی ہے۔

Show More

متعلقہ پوسٹس

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button