بین الاقوامی

پولیس چیف کی ہلاکت، قندہار میں کل ہونے والے پارلیمانی انتخابات ملتوی

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق قندھار میں اب الیکشن آئندہ ہفتے کو ہوں گے جب کہ ملک کے بقیہ حصوں میں انتخابات  طے شدہ شیڈول کے تحت ہوں گے۔

الیکشن کمیشن کی سفارش پر افغانستان کی نیشنل سیکیورٹی کونسل نے پولیس چیف عبدالرازق کے قتل کے بعد قندھار میں کل ہونے والے پارلیمانی الیکشن کو ملتوی کردیا۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق قندھار میں اب الیکشن آئندہ ہفتے کو ہوں گے جب کہ ملک کے بقیہ حصوں میں انتخابات  طے شدہ شیڈول کے تحت ہوں گے۔

رپورٹ کے مطابق الیکشن کمیشن کا موقف تھا کہ پولیس چیف عبدالرزاق کے قتل کے بعد قندھار میں حالات اس قابل نہیں کہ پُرامن انتخابات کے انعقاد کو یقینی بنایا جاسکے اس لیے کشیدہ صورت حال میں الیکشن کے انعقاد سے گریز کیا جائے۔

خیال رہے کہ افغانستان میں انتخابی عمل کو آغاز سے ہی دہشت گرد کارروائیوں کا سامنا ہے جہاں مختلف واقعات میں اب تک 50 سے زائد افراد ہلاک ہوئے ہیں۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق کاغذات نامزدگی جمع کراتے ہوئے الیکشن کمیشن میں 4 سے زائد بار خود کش حملے ہوئے، 6 انتخابی جلسوں کو نشانہ بنایا گیا جبکہ 8 انتخابی امیدواروں کو موت کے گھاٹ اتارا جا چکا ہے۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز ایک حملے میں قندھار پولیس چیف عبدالرازق، گورنر اور انٹیلی جنس سربراہ ہلاک ہوگئے تھے جس کی ذمہ داری طالبان نے قبول کی تھی۔

پولیس چیف عبدالرازق پاکستان اور طالبان مخالف پولیس افسر کے  طور پر جانے جاتے تھے جنہوں نے قندھار میں طالبان کے کئی حملوں کو پسپا کیا تھا۔

بعض ذرائع کے مطابق پاکستان کی جانب سے فینسنگ کے عمل میں رکاوٹیں اور افغان فورسز کے جانب سے حملے بھی جنرل عبدالرزاق کے کہنے پر ہی کی جاتے تھے۔

Show More

متعلقہ پوسٹس

Back to top button