بین الاقوامی

تاپی گیس پائپ لائن کی حفاظت کے لئے افغان طالبان کی خدمات بھی لی جاسکتی ہیں : خواجہ آصف

افغان حکومت نے ترکمانستان سے پاکستان اور ہندوستان جانے والی تاپی گیس پائپ لائن کو سیکورٹی دینے کے لئے سات ہزار سیکورٹی اہلکاروں کی تعیناتی کا فیصلہ کیا ہے۔ افغان پٹرولیم وزیر داؤد شاہ نے لوئے جرگہ سے کہا ہے کہ یہ اہلکار نہ صرف پائپ لائن گزرنے والے علاقے کو بارودی مواد سے صاف کرینگےبلکہ پائپ بچاتے وقت تحفظ بھی فراہم کرینگے۔ ترکمانستان سے افغانستان اور پھر انڈیا جانے والی اس گیس پائپ لائن پر لگ بگ دس ارب ڈالر کی لاگت آئے گی۔ چند ہفتے قبل اس منصوبے کے افتتاح کے موقع پر پاکستان کے وزیر دفاع خواجہ آصف کا کہنا تھا کہ اس پائپ لائن کی حفاظت کے افغان طالبان کی خدمت بھی لی جاسکتی ہیں۔

Show More

متعلقہ پوسٹس

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button