بین الاقوامی

افغانستان دہشت گردوں کے خلاف کاروائی کرے: نواز شریف

 وزیراعظم نواز شریف نے کہا ہے کہ افغانستان میں دہشت گردوں کے خلاف کارروائی افغان حکومت کی ذمہ داری ہے۔20 جنوری کو چارسدہ میں واقع باچا خان یونیورسٹی پر حملے کی منصوبہ بندی بھی افغانستان میں کی گئی جب کہ تحقیقات میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ حملہ آوور افغانستان سے ہی پاکستان آئے جب کہ ان کے چار پاکستانی سہولت کاروں کو بھی گرفتار کر لیا گیا ہے۔

 آج لندن میں اپنی رہائش گاہ پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وزیراعظم نواز شریف کا کہنا تھا کہ پاکستان دہشت گردوں کو اپنی سرزمین کسی بھی ملک کے خلاف استعمال نہیں کرنے دے گا۔ وزیراعظم نے کہا ‘مستحکم افغانستان ہی مستحکم پاکستان کی ضمانت ہے، ہم افغانستان میں امن کے خواہاں ہیں۔’

وزیراعظم نواز شریف کا کہنا تھا کہ افغانستان اور پاکستان کے درمیان معاہدہ ہوا ہے کہ دونوں ممالک اپنی سرزمین ایک دوسرے کے خلاف استعمال نہیں کرینگے جسکی افغانستان نے خلاف ورزی کی ہے۔ وزیراعظم کے مطابق ان کا ہرگز مطلب یہ نہیں کہ اس کاروائی میں افغان حکومت کا ہاتھ ہے لیکن پاکستان کو شکوہ ہے کہ افغان حکومت ان دہشت گردوں کے خلاف کاروائی کرے کیونکہ یہ ان کی زمہ دوری ہے

انہوں نے کہا کہ نیشنل ایکشن پلان اور آپریشن ضرب عضب مشاورت سے شروع کیے، اس پر عملدرآمد کر رہے ہیں اور اسے مزید تیز کریں گے۔

 

Show More

متعلقہ پوسٹس

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button